پیرس دہشت گردانہ حملہ میں ایک پولس افسر ہلاک، داعش نے لی ذمہ داری

پیرس: فرانس کے دارالحکومت پیرس میں صدارتی انتخابات سے عین قبل ہونے والی فائرنگ میں ایک پولس اہلکار کی موت جبکہ تین دیگر شدید زخمی ہو گئے۔ پولس نے جوابی کارروائی کرتے ہوئے اس حمہ آور کو گولی مار کر ہلاک کر دیا۔حملے کے فوراً بعد دالت اسلامیہ فی العراق و الشام (داعش) نے اس حملے کی ذمہ داری قبول کی۔ یہ واردارت فرانس میں ہونے والے صداری انتخابات سے محج تین روز پہلے انجام دی گئی ہے۔صدرفرانسوا اولندے نے کہا کہ انہیں یقین ہے چیمس ایلیسیس بلیوارڈ میں ہونے والی فائرنگ ایک دہشت گردانہ حملہ ہے جس میں حملہ آور نے پولس کو گولی مار کر قتل کیا ہے۔
پولس نے بتایا کہ اس واقعہ میں دو حملہ آور بھی شامل تھے جن میں سے ایک کو ہلاک کردیاگیا ہے۔ پیرس کے وسطی علاقے میں حملے کے وقت مقامی باشندوں اور سیاحوں کی کا فی بھیڑ تھی، جس کے پیش نظر پولس نے فوری کارروائی کرتے ہوئے علاقے کو صاف کردیا، جہاں فائرنگ کے بعد سکیورٹی فورس اور پولس کی گاڑیاں پہنچی ہوئی تھیں۔ پیرس کے پبلک پراسکیوٹر فرنسوا مولینس نے بتایا کہ حملہ آور کی شناخت کرلی گئی ہے اور تحقیقات کار اس سلسلے میں مزید تفتیش کررہے ہیں کہ حملہ آور کے کچھ ساتھی بھی ہوسکتے ہیں۔ پولس مارے گئے حملہ آور کے گھر کی تلاشی لے رہی ہے اور دوسرے حملہ آور کو تلاش کررہی ہے۔

Title: paris shooter killed after firing on police killing 1 officer | In Category: دنیا  ( world )
Tags: ,