دمشق پر باغیوں کے اچانک حملہ کے بعد خونریز جھڑپیں شروع

دمشق:شام کے دارالحکومت دمشق میں باغی جنگجوؤں کی جانب سے شامی فوج پر اچانک کئے حملے کے بعد ملک کے مشرقی حصے میں شدید جھڑپیں شروع ہو گئی ہیں۔ سرکاری ٹیلی ویژن کے مطابق باغی فوجی دستہ نے کل جنگجو گروپ جبہة فتح الشام کے ساتھ مل کر ملک کے مشرقی حصہ میں شامی فوج پر حملہ کر دیا۔
یہاں پورے علاقے سے گولیاں چلنے کی آواز سنی جا سکتی تھی۔ شامی سرکاری میڈیا نے بتایا کہ آدھی رات کو باغیوں کی جانب سے علاقے میں غیر قانونی دراندازی کرنے اور اچانک حملہ کرنے کے بعد فوج نے بھی ان پر سخت حملہ کیا۔ دہشت گردوں نے کل صبح یہاں دو طاقتور کار بم دھماکے بھی کئے تھے۔ حملے کی ذمہ داری تحریر الشام نے لی تھی۔
حملے کے بعد سرکاری فوج نے متعدد فضائی حملے کئے ۔ وہیں باغیوں نے دمشق میں باب ٹوما، رکن الدین اور عباسیان علاقے میں فائرنگ کی ۔ حملے کے بعد دارالحکومت کے کئی اسکولوں کو بند کر دیا گیاہے اور مقامی باشندے فائرنگ اور حملے کی وجہ سے گھروں میں ہی رہنے کو مجبور ہیں۔

Title: clashes break out in damascus after a surprise attack | In Category: دنیا  ( world )
Tags: ,